حادثے میں زخمی شخص کی مرہم پٹی کرنے والی خاتون کوعدالت سے جرمانہ لیکن کیوں؟ حیران کن وجہ سامنے آگئی 

برطانیہ میں جعلی ڈاکٹر بن کر موٹرسائیکل سے گرنے والے شخص کی مرہم پٹی کرنے والی خاتون کو بھاری جرمانہ کر دیا گیا۔ دی سن کے مطابق یہ واقعہ گزشتہ سال ویلز کے شہر کوروین میں پیش آیا جہاں مارٹن جونز نامی شخص اپنی الیکٹرک بائیک سے گر کر زخمی ہو گیا تھا۔ 47سالہ جواین گراہم نے ڈاکٹر بن کر مارٹن کے زخموں کا معائنہ کیا اور ابتدائی طبی امداد دی۔







رپورٹ کے مطابق جواین نے مارٹن کے زخم دیکھنے کے لیے اس کے کپڑے کاٹ ڈالے اور طبی امداد کی کوشش میں مارٹن کی ٹوٹی ہوئی کلائی کو مزید نقصان پہنچادیا۔ عدالت میں جواین کا کہنا تھا کہ وہ ماﺅنٹین ریسکیو میں کام کرتی رہی ہے اور اس نے اسی حوالے سے مارٹن کو طبی امداد کی پیشکش کی تھی۔

جواین کا کہنا تھا کہ ”میں نے مارٹن سے یہ نہیں کہا تھا کہ میں ڈاکٹر ہوں۔“ تاہم عدالت میں اس کا موقف مسترد کرتے ہوئے میڈیکل ایکٹ 1983ءکے تحت اسے جعلسازی اور مارٹن کو جسمانی نقصان پہنچانے کامرتکب قرار دیتے ہوئے1ہزار 410پاﺅنڈ (تقریباً 3لاکھ 37ہزار روپے)جرمانہ کر دیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں